2609955695_150c54de16_b

سردی کی شدت بڑھتے ہی لنڈے کی اشیاء بھی مہنگی

سردی کی شدت بڑھتے ہی پشاور میں لنڈے کی اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ کر دیاگیا۔دسمبر کا مہینہ خشک گزرنے اور بارشیں نہ ہونے کی ساری کسر جنوری میں دکانداروں نے نکالنا شروع کر دی جبکہ ریڈی میڈ ملبوسات کی قیمتوں میں 100فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق صوبے کے بالائی علاقوں میں شدید برف باری کے بعد صوبائی دارالحکومت پشاور میں بھی جنوری کا آغاز ہوتے ہی بارشوں نے سردی کی شدت بڑھا دی اور لوگوں نے گرم ملبوسات کی خریداری کیلئے بازاروں کا رخ کیا تاہم صرف ایک ماہ کے دوران ہی لنڈے کی اشیاء کی قیمتوں میں70سے80فیصد تک اضافہ کر دیاگیا ہے۔جو سویٹر،جرسی اور جیکٹ 500روپے میں دستیاب تھی اب 700سے800روپے میں فروخت کی جارہی ہے جبکہ ریڈی میڈ گرم ملبوسات کی قیمتوں میں سو فیصد اضافہ کیاگیا ہے جس پر شہریوں نے شدید رد عمل ظاہر کرتے ہوئے انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ گرانفروشی کنٹرول کرنے کیلئے اقدامات کئے جائیں تاہم دکانداروں کا کہنا ہے کہ نومبر اور دسمبر خالی ہاتھ گزارنے کے بعد جنوری میں خسارا پورا کرنے کیلئے قیمتوں میں کچھ حد تک اضافہ کیا ہے۔