خیبر پختونخوا

بنی گالہ کیس: چیف جسٹس پاکستان نے پی ٹی آئی حکومت کی اہلیت، صلاحیت اورمنصوبہ بندی پرسوالات اٹھادیے

لاہور(ویب ڈیسک): سپریم کورٹ آف پاکستان بنی گالہ میں تجاوزات کے متعلق کیس کی سماعت ہوئی. چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثارنے کیس کی سماعت کی. دورانِ سماعت انہوں نےریمارکس دیے کہ حکومت کے پاس نہ اہلیت ہے نہ کوئی صلاحیت اورنہ ہی کوئی منصوبہ بندی نظرآرہی ہے. آپ لوگوں نے سڑکیں‌اورسیوریج کونظام بناناہے. چیف جسٹس پاکستان کے یہ ریمارکس اس وقت سامنے آئے جب ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے عدالت میں بنی گالہ میں تجاوزات کے متعلق سی ڈی اے کی رپورٹ جمع کروائی. چیف جسٹس پاکستان نے مزید ریمارکس دیے کہ سڑکیں اورسیوریج ڈالنے کے لیے آپ کو زمین کی ضرورت ہوگی. ہوسکتاہے زیرِزمین لائنزبچھانی پڑیں. نیاپاکستان بن رہاہے ہوسکتاہے آپ لوگ زیرِزمین ٹرین چلانے کا بھی سوچیں. سی ڈی اے نے اس حوالے سے کوئی پلان نہیں‌دیا. بہتریہی ہے کہ پرانی تعمیرات کوریگولرائزکردیں.