بنیادی صفحہ -> پاکستان کی خبریں -> چوہدری نثار کو ڈی سیٹ کرنے کیلئے حکومت کا اہم قدم
حکومت
حکومت

چوہدری نثار کو ڈی سیٹ کرنے کیلئے حکومت کا اہم قدم

لاہور(ویب ڈیسک ) سابق وزیر داخلہ چودھری نثار علی خان کو ڈی سیٹ کرنے کیلئے حکمران جماعت تحریک انصاف نے اسمبلی کے قواعد و ضوابط 1997 میں ترمیم کا نوٹس پنجاب اسمبلی میں جمع کروادیا-
ذرائع کے مطابق : تحریک انصاف کی رکن پنجاب اسمبلی مومنہ وحید کی جانب سے جمع کرائے گئے نوٹس میں قواعد انضباط کار صوبائی اسمبلی پنجاب 1997میں ترمیم کی درخواست کی گئی ہے.نوٹس میں قاعدہ 36 کے تحت کسی رکن کی سیٹ خالی قرار دیئے جانے کیلئے ترمیم تجویز کی گئی ہے…جس کے تحت انتخابات میں منتخب ہونے والا رکن اگر اپنے انتخاب کے بعد پہلے پانچ اجلاس تک پنجاب اسمبلی میں حلف نہ اٹھائے تو اس کی اسمبلی رکنیت منسوخ کرنے کا سیکرٹری گزٹ نوٹیفکیشن شائع کرائے گا اور نوٹیفکیشن کی ایک نقل چیف الیکشن کمشنر کو بھجوائی جائے گی.نوٹس کے وضاحتی بیان میں پی ٹی آئی رکن مومنہ وحید کا کہنا تھا کہ انتخابات میں جو شخص رکن پنجاب اسمبلی منتخب ہونے کے باوجود بغیر کسی عذر و بیماری مسلسل حلف نہ اٹھائے اور عوام کی حق رائے دہی کے مطابق اسمبلی میں اور اسمبلی سے باہر بطور نمائندہ کردار ادا نہ کرے وہ شخص اپنے حلقہ کے عوام اور پنجاب اسمبلی کے ایوان کی توہین کا باعث بنتا لہذا اس شخص کی اسمبلی رکنیت منسوخ کر کے اس حلقہ میں نیا انتخاب کرایا جائے جوکہ حلقہ کے عوام کے ساتھ انصاف اور اسمبلی کے وقار کو قائم رکھنے کے لئے ضروری ہے-

وزیراعظم عمران خان نے دواہم ترین افسران کو برطرف کرنے کا فیصلہ کرلیا
لاہور(ویب ڈیسک): وزیراعظم عمران خان نے سوئی ناردرن اور سوئی سدرن گیس کمپنی کے منیجنگ ڈایئریکٹرز کو برطرف کرنے کی ہدایت کردی اور متعلقہ حکام کو گیس کی قلت ایک ہفتے کے اندر ختم کرنے کا بھی حکم دے دیا۔نجی نیوز چینل مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت کابینہ کمیٹی برائے توانائی کا اجلاس ہوا جس میں وزیر خزانہ اسد عمر، وزیر پیٹرولیم غلام سرور خان، وزیر پاور عمر ایوب خان، وزیر پلاننگ کمیشن خسرو بختیار اور دیگر حکام نے شرکت کی۔ اس موقع پر وزیر اعظم نے گیس کی قلت پر تحفظات کا اظہار کیا اور سوئی ناردرن کے ایم ڈی امجد لطیف اور سوئی سدرن کے ایم ڈی امین راجپوت کو برطرف کرنے کی ہدایت کی ہے۔یاد رہے کہ دونوں گیس کمپنیوں کے ایم ڈیز کے خلاف گزشتہ ماہ سندھ اور پنجاب میں اچانک ہونے والی گیس کی قلت پر انکوائری ہو رہی تھی۔سیکرٹری پیٹرولیم نے انکوائری کے بعد وزیراعظم کو رپورٹ جمع کرائی تھی ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*