بنیادی صفحہ -> اہم خبریں -> شریف خاندان نے نشان عبرت بن کر بھی سبق نہیں سیکھا

شریف خاندان نے نشان عبرت بن کر بھی سبق نہیں سیکھا

لاہور(ویب ڈیسک) وزیر اعظم کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان کا کہنا ہے کہ انکوائری کمیشن کے سربراہ کا آئندہ ہفتے اعلان کردیا جائے گا، مریم نواز کے غرور اور تکبر کی سزا یہ ہے کہ ان کے والد پابند سلاسل ہیں،یہ مکافات عمل ہے کہ شریف خاندان نے نشان عبرت بن کر بھی سبق نہیں سیکھا، سیاسی گدی نشین ہر جمعرات جیل میں ظل سبحانی کی زیارت کرکے فخر محسوس کرتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق :‌پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ انکوائری کمیشن آئین وقانون کے دائرہ کار میں بنایا جائے گا جس کے ٹی او آرز طے کیے جارہے ہیں، انکوائری کمیشن خودمختار ہوگا، آئندہ ہفتے انکوائری کمیشن کے سربراہ کا اعلان کردیا جائے گا۔ ہر وہ شخص جو پبلک آفس ہولڈر رہا اس کو حساب دیناپڑے گا۔ انہوں نے کہا کہ 10 سال حکومت کرنے والے 10 ماہ کی حکومت سے حساب مانگ رہے ہیں۔ 3 بار ملک کا وزیراعظم رہنے والا لوٹ کھسوٹ اور کرپشن میں مصروف رہا نواز شریف اپنے خاندان کیلئے بیرون ملک جائیدادیں بناتے رہے لیکن ان کے بیٹے فخر سے پاکستانی نہ ہونے کا اعلان کرتے ہیں۔ فردوس عاشق اعوان نے مریم نواز کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ سونے کا چمچ لے کر پیدا ہونے والی مریم نواز پہلے راج کماری جیسی زندگی گزاررہی تھیں، مریم نواز کے غرور اور تکبر کی سزا یہ ہے کہ ان کے والد پابند سلاسل ہیں،یہ مکافات عمل ہے کہ شریف خاندان نے نشان عبرت بن کر بھی سبق نہیں سیکھا، کیا پدی اور کیا پدی کا شوربہ، اپنی اوقات میں رہیں اگر آپ نے زبان ٹھیک نہ کی تو میرے پاس کہنے کیلئے بہت کچھ ہے۔ انہوں نے کہا کہ سیاسی گدی نشین ہر جمعرات کو ظل سبحانی سے ملاقات کرتے ہیں یہ لوگ جیل میں ظل سبحانی کی زیارت کرکے فخر محسوس کرتے ہیں، عمران خان کا بیانیہ درست تھا کیونکہ وہ کہتے رہے ہیں کہ ان کی مک مکا کی سیاست ہے ، عمران خان نے سیاست سے گند کو صاف کیا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*