حکومت کی جانب سے نئی 5 سالہ تجارتی پالیسی کا مسودہ تیار

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)وزرات تجارت کی جانب سے نئی 5 سالہ تجارتی پالیسی کا مسودہ تیار کر لیا گیا۔

وزارت تجارت کے حکام کا کہنا ہے کہ نئی 5 سالہ تجارتی پالیسی آخری مراحل میں ہے جو پہلے اکنامک کوارڈینیشن کمیشن( ای سی سی) سے منظور ہوگی جس کے بعد اسے کابینہ میں پیش کیا جائے گا۔حکام کے مطابق نئی تجارتی پالیسی میں تمام سٹیک ہولڈرز کو اعتماد میں لیا گیا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ نئی مجوزہ تجارتی پالیسی کے تحت 21-2020 میں برآمدات 26 ارب ڈالرز اور 22-2021 میں برآمدات 31 ارب ڈالرز تک لے جانے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے۔ حکام کے مطابق 23-2022 میں برآمدات کا ہدف 35 ارب ڈالرز، 2024 میں 40 ارب ڈالرز اور 2025 میں برآمدات 46 ارب ڈالرز تک سالانہ لے جانے کا منصوبہ ہے۔

اس کے علاوہ وزارت تجارت کے حکام نے وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت تجارتی پالیسی پر عمل درآمد کے لیے کمیٹی تشکیل دینے کی تجویزبھی دی ہے۔

یاد رہے کہ آخری تین سالہ تجارتی پالیسی ن لیگ حکومت میں 2015 میں متعارف کروائی گئی تھی۔