Indian Media, Nishan e Haider, Darren Sammy, Civilian Award

بھارتی میڈیا پاکستان کے اعلیٰ سویلین ایوارڈ کو نشانِ حیدر سمجھ بیٹھا

لاہور(ویب ڈیسک): بھارتی ویب سائٹ انڈیا ٹوڈے نے ویسٹ انڈیز کے کرکٹر ڈیرن سیمی کو حکومت پاکستان کی طرف سے اعلیٰ ترین سویلین ایوارڈ نشانِ پاکستان دینے کے اعلان پر ایوارڈ کا نام تبدیل کرکے اسے اعلی ترین فوجی اعزاز نشانِ حیدر میں بدل دیا۔

چند روز قبل حکومت پاکستان کی جانب سے یہ اعلان کیا گیا تھا کہ ویسٹ انڈیز کے کرکٹر ڈیرن سیمی کو پاکستان کی اعزازی شہریت اور سب سے بڑے سول ایوارڈ نشان پاکستان سے نوازا جائے گا۔یہ خبر دنیا بھر کے مختلف چینلز اور اخباروں میں بھی نشر کی گئی اور اسی طرح بھارتی میڈیا کی جانب سے بھی اس خبر کو شائع کیا گیا۔بھارتی ویب سائٹ انڈیا ٹوڈے کی جانب سے جب اس خبر کو نشر کیا گیا تو اس میں ایک بڑی غلطی دیکھنے میں آئی، وہ یہ تھی کہ بھارتی میڈیا نے پاکستان کے اعلی ترن سویلین ایوارڈ نشانِ پاکستان کو نشانِ حیدر ہی قرار دے دیا۔بھارتی میڈیا کے مطابق 23 مارچ 2020 کو حکومتِ پاکستان کی جانب سے ویسٹ انڈیز کے کرکٹر ڈیرن سیمی کو نشانِ حیدر سے نوازا جائے گا۔خیال رہے کہ اس سے پہلے بھی بھارتی ویب سائٹ کی جانب سے گلوکار عاطف اسلم کے بیٹے کی پیدائش کی خبر نشر کی گئی تھی جس میں انہوں نے گلوکار کے بیٹے کا نام الحمداللہ لکھا تھا۔بعد ازاں بھارتی ویب سائٹ کی جانب سے گلوکار کے بیٹے کا غلط نام لکھنے پر معذرت کی گئی تھی۔