بنیادی صفحہ -> اہم خبریں -> نیوزی لینڈ مساجد پر حملے ، سعودی حکومت بھی میدان میں آگئی

نیوزی لینڈ مساجد پر حملے ، سعودی حکومت بھی میدان میں آگئی

لاہور(ویب ڈیسک)‌ نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں 2 مساجد پر دہشت گردی کے ہونے والے ہولناک حملوں کے بعد سعودی حکومت نے بھی میدان میں آ تے ہوئے دوٹوک الفاظ میں دہشت گردی کے اس ہولناک واقعہ پر اپنا واضح موقف دے دیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق : سعودی عرب کی وزارت خارجہ نے نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں نماز جمعہ کے دوران نمازیوں پر فائرنگ کے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب دہشت گردی کی تمام شکلوں اور حالتوں کی مذمت کرتا ہے،دہشت گردی رنگ، نسل اور مذہب سے بالا تر ہو کر کی جاتی ہے کیونکہ سعودی مملکت سمجھتی ہے کہ دہشت گرد کا کوئی وطن اور مذہب نہیں ہوتا۔سعودی عرب نے تمام مذاہب کے احترام کی اپیل کرتے ہوئے فائرنگ کے نتیجے میں لقمہ اجل بننے والوں کے لواحقین سے تعزیت اور نیوزی لینڈ حکومت اور عوام کے لئے نیک خواہشات اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لئے دعا کی ہے۔دوسری طرف نیوزی لینڈ میں سعودی سفارتخانے نے تصدیق کی ہے کہ کرائسٹ چرچ میں دو مساجد پر کئے جانے والے دہشت گرد حملوں میں ایک سعودی شہری بھی زخمی ہوا ہے، ہم جنوبی جزیرے کرائسٹ چرچ نماز کے دوران مسجدوں پر ہونے والے حملے کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال کو قریب سے دیکھ رہے ہیں،اس حملے میں ایک سعودی شہری بھی زخمی ہوا ہے۔سعودی سفارتخانے نے نیوزی لینڈ میں موجود اپنے شہریوں کو احتیاط برتنے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس سلسلے میں مقامی انتظامیہ اور حکومت کی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے غیر ضروری طور پر گھروں سے نکلنے سے گریز کیا جائے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*