Buy website traffic cheap

ڈاکٹر عامرلیاقت

توہینِ عدالت کیس: پی ٹی آئی رہنماء ڈاکٹر عامرلیاقت کا معافی نامہ مسترد، سپریم کورٹ کا فردِ جرم عائد کرنے کا حکم

لاہور(ویب ڈیسک): سپریم کورٹ آ ف پاکستان نے توہین عدالت کیس میں تحریک انصاف کے رکن قومی اسمبلی اور اینکر پرسن ڈاکٹر عامر لیاقت کی معافی مسترد کردی اور 27 ستمبر تک ان کیخلاف فرد جرم عائد کرنے کا حکم دیدیا۔ تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں بنچ نے ڈاکٹر عامر لیاقت کیخلاف توہین عدالت کیس کی سماعت کی ،عدالت نے عامر لیاقت کی معافی کی استدعا مستر دکردی،عدالت نے عامر لیاقت کیخلاف 27 ستمبر کو فرد جرم عائد کرنے کا حکم دے دیا۔عدالت نے اپنے ریمارکس میں کہا ہے کہ ڈاکٹر عامر لیاقت کے پاس 2 آپشن ہیں کہ یاتو وہ مقدمے کی پیروی کریں یاخود کو عدالت کے رحم و کرم پر چھوڑ دیں عدالت نے ڈاکٹر عامر لیاقت کو وقت دیتے سماعت 27 ستمبر تک ملتوی کردی۔واضح رہے کہ اینکر پرسن عامر لیاقت کو توہین آمیز گفتگو کرنے پر سپریم کورٹ نے نوٹس جاری کیا تھااور ان سے 14 دن میں جواب طلب کر رکھا تھا۔