Buy website traffic cheap


حبکو نے سندھ حکومت کو 300 ملین گیلن کا ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے کی پیشکش کردی

لاہور(ویب ڈیسک): وزیراعلی سندھ کی زیر صدارت ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے سے متعلق اجلاس میں حبکو نے سندھ حکومت کو 300 ملین گیلن کا ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے کی پیشکش کردی۔تفصیلات کے مطابق وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے سے متعلق اجلاس ہوا جس میں صوبائی وزرا سعید غنی، شہلا رضا ودیگر شریک ہوئے ۔اس موقع پر وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ کراچی میں پانی کی قلت ہے،کراچی کو2ذرائع سے پانی مل رہا ہے،کراچی کوکینجھرجھیل سے583 ملین گیلن پانی مل رہا ہے جبکہ حب ڈیم سے 100 ملین گیلن ملاکر683 ملین گیلن پانی کراچی کومل رہا ہے،چاہتا ہوں شہرکے لوگوں کوسمندر کے پانی کومیٹھابناکرمہیاکیاجائے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ کراچی کے صنعتی علاقوں کو پانی کی طلب 200 ملین گیلن ہے،چاہتے ہیں کہ کراچی کے لئے 300 ملین گیلن کا ڈی سیلینیشن پلانٹ لگایا جائے۔جس پر حبکو نے سندھ حکومت کو 300 ملین گیلن کا ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے کی پیشکش کردی۔ حبکو حکام کاکہنا تھا کہ ڈی سیلینیشن پلانٹ حب کے پاس لگایا جائے،حب سے کراچی کو پانی پہنچانے کے لیے واٹر چینل بنا ہوا ہے۔وزیراعلی سندھ نے حبکو کوپیشکش کرتے ہوئے کہا کہ کراچی کے کچرے سے بجلی پیدا کرنا چاہتے ہیں،اس کام میں حبکو ہماری مدد کرے۔جس پرحبکو حکام کاکہنا تھا کہ سالڈ ویسٹ مینجمنٹ روزانہ 3 ہزارٹن کچرا فراہم کرے توپاورپلانٹ لگا سکتے ہیں۔