Buy website traffic cheap

شہباز شریف

خادم پنجاب بہت ہی بُرے پھنس گئے، اب کیا ہوگا؟

خادم پنجاب بہت ہی بُرے پھنس گئے، اب کیا ہوگا؟………..سپریم کورٹ نے 56 کمپنیز کیس میں وزیراعلی پنجاب شہباز شریف کو طلب کر لیا۔ چیف جسٹس ثاقب نثار نے کہا کہ شہباز شریف پیش ہو کر وضاحت کریں کہ بھاری تنخواہوں پر بھرتیاں کیسے ہوئٰیں۔
سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں 56 کمپنیوں میں مبینہ کرپشن سے متعلق از خود نوٹس کی سماعت چیف جسٹس ثاقب نثار نے کی۔ سماعت کے دوران چیف جسٹس نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف خود پیش ہو کر وضاحت کریں کہ سرکاری افسران کو بھاری تنخواہوں پر کیسے بھرتی کیا گیا۔ جس پر ایڈوکیٹ جنرل پنجاب نے کہا کہ وزیر اعلی پنجاب کا کمپنیوں سے براہ راست رول نہیں تھا. چیف جسٹس نے ریمارکس دئیے کہ شہباز شریف کے رول کے بغیر تو یہاں مکھی بھی نہیں اڑتی. پوچھیں اپنے وزیر اعلی سے کہ وہ کہاں ہیں اور کس وقت عدالت پیش ہوں گے. چیف جسٹس نے نیب کو 56 کمپنیوں کے سی ای اوز کی جائیداد کا تخمینہ لگانے کا حکم بھی دے د

———————-
یہ خبر بھی پڑھیئے

بھارت بوکھلاہٹ کا شکار ہے اور اسے لوگوں کو مارڈالنے کے سوا کوئی دوسرا کام نہیں سوجھتا
بھارتی فورسز کا تازہ اور سنگین جرم 21 سالہ نوجوان قیصر احمد کو گاڑی تلے کچل کر شہید کرنا ہے
حریت کانفرنس ،لبریشن فرنٹ، فریڈم پارٹی،دختران ملت،نیشنل فرنٹ، پیپلزپولٹیکل فرنٹ
سری نگر÷÷÷÷÷÷حریت کانفرنس ،لبریشن فرنٹ، فریڈم پارٹی،دختران ملت،نیشنل فرنٹ، پیپلزپولٹیکل فرنٹ، پیپلز لیگ،تحریک مزاحمت،لبریشن فرنٹ (آر)،ووئس آف وکٹمز، مسلم کانفرنس،محاز آزادی، ینگ مینز لیگ، انٹرنیشنل فورم فار جسٹس ،تحریک استقامت،ڈیموکریٹک پولٹیکل مومنٹ،پیروان ولایت، لبریشن فرنٹ، اسلامک پولیٹکل پارٹی اور سالویشن مومنٹ نے فتح کدل کے معصوم اور یتیم نوجوان قیصر احمد کی ہلاکت پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اپنی گاڑیوں کے نیچے لاکر کچل دینا اب بھارت کی فورسز کا کشمیر میں نیا ہتھیار بن چکا ہے۔ ۔لبریشن فرنٹ کا ایک وفد زونل آرگنائزر بشیر احمد کشمیری کی سربراہی میں فتح کدل گیا جہاں انہوں نے قیصر امین کی نماز جنازہ میں شرکت کی ۔ اس موقع پر فرنٹ قائدین نے کہا کہ گاڑیوں کے نیچے لاکر کچل دینا اب بھارت کی فورسز کا کشمیر میں نیا ہتھیار بن چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ اشک آور گیس کے شیل، گولیاں اور پیلٹ سے کشمیریوں کو تہہ تیغ کردینے کے بعد اب بھارتی استعمار نے کشمیری معصومین کو اپنی آرمڈ گاڑیوں کی زد میں لاکر کچک کر مارڈالنے کا نیا سلسلہ شروع کردیا ہے اور ایسا کرتے ہوئے یہ فورسز کوئی عار یا شرم بھی محسوس نہیں کرتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ کشمیر میں بھارتی جبر و ظلم اب اپنی انتہا کو پہنچ چکا ہے اور اس ظلم و جبر اور سفاکانہ قتل عام کی براہ راست ذمہ داری یہاں کے بھارت نواز سیاست کاروں ،انکی سیاسی جماعتوں اور خاص طور پر پی ڈی پی پی کی سربراہی میں قائم نام حکومت کے سر عائد ہوتی ہے جنہوں نے فورسز کو بے لگام چھوڑ کر انہیں قانونی جواز فراہم کیا ہوا ہے اور مواخذے سے استثنا دے کر ان کی سفاکیت کو فروغ دیا ہے۔جلوس جنازہ پر اندھا دھند شلنگ کی مذمت کرتے ہوئے فرنٹ قائدین نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ بھارت بوکھلاہٹ کا شکار ہے اور اسے لوگوں کو مارڈالنے کے سوا کوئی دوسرا کام نہیں سوجھتا ہے۔فریڈم پارٹی نے ہلاکت کو بھارتی فورسز کا تازہ اور سنگین جرم قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ وردی پوش اہلکاروں نے ایک بار پھر کشمیری قوم کو خون کے آنسو رلادیا۔پارٹی نے فورسز کے ہاتھوں ایک اور کشمیری نوجوان کے قتل پر انتہائی رنج و غم کا اظہار کیا۔ پارٹی نے کہا کہ نئی دلی اور سرینگر میں جو لوگ اقتدار پر براجمان ہیں انہیں کشمیریوں کے خون ناحق سے کوئی سروکار نہیں ہے اور یہ ایک انتہائی تشویشناک معاملہ ہے۔پارٹی ترجمان نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ