Buy website traffic cheap

حسن

“خلائی مخلوق” نوازشریف کے بیانیے پر نگراں وزیراعلیٰ بول پڑے

خلائی مخلوق، نوازشریف کے بیانیے پر نگراں وزیراعلیٰ بھی بول پڑے….نگراں وزیراعلیٰ پنجاب حسن عسکری نے کہا ہے کہ شفاف انتخابات کرانا میری بنیادی ذمہ داری ہے، میرا کوئی سیاسی ایجنڈا نہیں، تمام سیاسی جماعتوں میں توازن برقراررکھیں گے۔

نگراں وزیر اعلیٰ نے کہا جب سے لکھنا شروع کیا سب حکومتوں پرتنقید کی، میں آج سے نہیں 40 سال سے اخبارات میں لکھ رہا ہوں، الیکشن کوشفاف بنانے کے لیے امن وامان برقراررکھنا لازمی ہے پروفیسرحسن عسکری نے کہا خلائی مخلوق سیاسی جماعتوں کا بیانیہ ہے جووہ اپنے مقصد کے لیے دیتی ہیں، جب بھی نئی حکومت آتی ہے بعض تبدیلیاں کی جاتی ہیں۔

——————–
یہ خبر بھی پڑھیئے

انتخابات 2018میں پیپلزپارٹی واضح اکثریت سے حکومت بنائے گی ،سید عابد حسین
چیئرمین بلاول بھٹو کی قیادت میں پیپلز پارٹی ملک میں سب سے بڑی سیاسی قوت بن چکی ہے
مظفرآباد(…پاکستان پیپلزپارٹی آزادکشمیر لچھراٹ کے مرکزی رہنما سید عابد حسین کاظمی نے کہا ہے کہ پیپلزپارٹی 2018 میں پاکستان بھر میں واضح اکثریت سے حکومت بنائے گی، آزادکشمیر میں لیگی حکومت خود ہی اپنے قبل از وقت خاتمے کی طرف جا رہی ہے، جلد آزادکشمیر کے عوام کو بھی اجارہ دار ٹولے سے نجات ملے گی، لچھراٹ میں قائد لچھراٹ سید بازل نقوی کی قیادت میں پیپلزپارٹی ناقابل شکست قوت ہے اور رہے گی، گزشتہ روز میڈیا نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ 2018 کے انتخابات میں چاروں صوبوں سمیت وفاق میں بھی پیپلز پارٹی بھاری اکثریت سے حکومتیں بنائے گی، شریک چیرمین پیپلزپارٹی مرد حر آصف علی زرداری، چیئرمین بلاول بھٹو کی قیادت میں پیپلز پارٹی ملک میں سب سے بڑی سیاسی قوت بن چکی ہے، انہوں نے کہا کہ آزاد کشمیر کے عوام کو بھی جلد اجارہ داروں کے ٹولہ سے نجات ملنے والی ہے کیونکہ لیگی ممبران اسمبلی خود ہی اپنی حکومت کو خاتمے کیطرف لے جا رہے ہیں، اس لیے آزادکشمیر حکومت کی باہر سے مخالفت کی ضرورت ہی نہیں، پیپلزپارٹی لچھراٹ میں قائد لچھراٹ سید بازل نقوی کی قیادت میں متحدو منظم ہے اور کارکنان نے جماعت کو مزید مضبوط بنانا شروع کر رکھا ہے۔
کپوارہ قصبہ سے تعلق رکھنے والے نوجوان فاروق احمد ڈاگہ جو گزشتہ 7برسوں سے دلی کے تہاڑ جیل میں بند تھے ،کو عدالت نے بری کر دیا ۔فاروق احمد ڈاگہ کو 7سال قبل پولیس نے حوالہ سکینڈل کیس میں گرفتار کر کے تہاڑ جیل میں بند کیا ۔فا روق احمد ولد غلام محمد ڈاگہ 90کی دہائی میں مجاہدین کی صف میں شامل ہوئے تھے تاہم بعد میں اس کو گرفتار کیا گیا اور چند سال بعد رہا کیا گیا ۔جیل سے رہائی کے بعد فاروق احمد ڈاگہ افراد خانہ کا پیٹ پالنے کے لئے تجارت کے ساتھ مصروف ہوگیا لیکن 11جنوری2011کو وہ کسی کام سے کپوارہ سے سرینگر جارہا تھا اور نار بل کے مقام پر پولیس کی ایک خصوصی ٹیم نے انہیں گرفتار کیا جس کے بعد انہیں دلی کے تہاڑ جیل میں بند کیا گیا۔فاروق پر الزام تھا کہ وہ حوالہ سکینڈل میں ملو ث ہے ۔فاروق کی گرفتار ی اور 7برسو ں سے تہاڑ جیل میں بند ہونے کے دوران ان کے اہل خانہ کسمپرسی کی زندگی گزار رہے تھے جبکہ معمر والدین 7برسو ں کے دوران ان کی رہائی کے انتظار میں لا غر ہوگئے ۔دو روز قبل فاروق احمد ڈاگہ اور ان کے دو ساتھیو ں محمد صدیق گنائی اور غلام جیلانی ساکنا ن سوپورکو پٹیالہ کورٹ ہاؤ س دلی نے بری کر دیا اور اس کے رہائی کے احکامات صادر کئے ۔فاروق احمد ڈاگہ جمعرات کو سرینگر پہنچ گئے جہا ں انہو ں نے مزار شہد ا پر حاضری دی اور انہیں خراج عقیدت پیش کیا ۔