Buy website traffic cheap

زلفی بخاری

عمران خان کے دوست زلفی بخاری کی بیرونِ ملک روانگی، تما م حقائق سامنے آگئے، رپورٹ نگران وزیراعظم کو موصول

لاہور(ویب ڈیسک): پاکستان تحریکِ انصاف کے چیئرمین عمران خان کے دوست زلفی بخاری کا نام بلیک لسٹ میں ہونے کے باوجود سعودی عرب عمرہ کے لیے روانہ ہوجانے کا معاملہ معمہ بن گیا ہے۔ اس حوالے سے نگران وزیراعظم جسٹس ریٹائرڈ ناصرالملک نے نوٹس لیا جس کے بعد وزارتِ داخلہ نے مفصل رپورٹ لکھ کر نگران وزیراعظم کو بھیج دی ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بلیک لسٹ میں شامل افرادکو ون ٹائم پرمیشن نہیں ملتی تو پھر زلفی بخاری کو جانے کی اجازت کس طرح دی گئی۔ دوسرا جس ادارے نے کسی شخص کا نام بلیک لسٹ میں شامل کروایا ہو اجازت دیتے وقت اس ادارے کو بھی اعتما د میں لیا جاتا ہے۔ زلفی بخاری کا نام چونکہ نیب نے بلیک لسٹ کروایا تھا لیکن پرمیشن دیتے وقت نیب کو اعتمادمیں نہیں لیا گیا۔ قانون کے مطابق نام بلیک لسٹ سے نکالنے کے لیے تین سے چارگھنٹے درکا رہوتے ہیں پر زلفی بخاری کے کیس میں صرف چھبیس منٹس لگے۔ وزارتِ داخلہ کی اس رپورٹ کا جائزہ نگران کابینہ کے اجلاس میں لیا جائیگا۔