Buy website traffic cheap

جعلی اکاؤنٹس

میگا کرپشن مقدمات کو منطقی انجام تک پہنچانا ترجیح ہے، چیئرمین نیب

گوجرانوالہ (آ ئی این پی) نارووال سپورٹس سٹی کی تعمیر میں کروڑوں کی مالی بے ضابطگیوںکے الزام پر سابق ڈی جی سپورٹس اختر گنجیرا کوایف آئی اے نے حراست میں لے لیا،سابق ڈی جی پرسپورٹس سٹی میں من پسند لوگوں کو ٹھیکے دینے،غیر معیاری میٹریل استعمال کر نے کا الزام ہے، ایف آئی اے نے سابق وزیر کھیل ریاض پیر زادہ،احسن اقبال اور یوسف رضا گیلانی کو شامل تفتیش کرنے کا فیصلہ کیا۔ جمعرات کو ناروال سپورٹس سٹی میں سابقہ دور حکومت میںکروڑوں روپے کی کرپشن کا سکینڈل بھی سامنے آگیا جس کے بعد سابق ڈائرکٹر جنرل پاکستان سپورٹس بورڈ اختر نواز گنجیرا کو ایف آئی اے نے گرفتارکرکے تحقیقات شروع کر دیں۔ اختر گنجیرا کا 5روزہ چالان حاصل کر کے انہیں ایف آئی اے کے دفتر گوجرانوالہ میں رکھا گیا ہے۔سابق ڈی جی سپورٹس بورڈ کو نارووال سپورٹس سٹی میں کروڑوں کی مالی بے ضابطگیوں میں الزام گرفتار کیا گیا۔ابتدائی تحقیقات کے مطابقسابق ڈی جی نے سپورٹس سٹی میں من پسند لوگوں کو ٹھیکے دئیے گئےاورغیر معیاری میٹریل استعمال کیا۔ذرائع کے مطابق نارووال سپورٹس سٹی کے چار ارب مالیت کے منصوبے پر اب تک ڈھائی ارب روپے خرچ ہوچکے ہیں۔ سابق ڈی جی پاکستان سپورٹس بورڈاختر نواز سپورٹس نارووال سپورٹس کمپلیکس کے خود ساختہ اور غیر قانونی پراجیکٹ ڈائریکٹر بنے رہے ۔ اختر گنجیرا ٹھیکے کے بلوں پربھی خود ہی دستخط کرتے رہے۔سابقہ دور حکومت میں وزیر منصوبی بندی احسن اقبال نے منصوبہ مکمل ہونے سے قبل ہی اس کا افتتاح کر دیاتھا۔ قانون نافذ کرنے والے ادارے نے سابق وزیر کھیل ریاض پیر زادہ،احسن اقبال اور یوسف رضا گیلانی کو شامل تفتیش کرنے کا فیصلہ کیا ہے