Buy website traffic cheap

وائٹ ہاؤس

ٹرمپ کا سی این این کے صدر کو ہٹانے کا مطالبہ

ٹرمپ کا سی این این کے صدر کو ہٹانے کا مطالبہ
واشنگٹن: میڈیا اور سوشل میڈیا ٹیکنالوجی کمپنیوں پر کڑی تنقید کے بعد امریکی صدر نے سی این این کے صدر کو فارغ کرنے کا مطالبہ کر دیا ۔ متنازع اسٹوری پر سی این این کا کہنا ہے کہ وہ جھوٹ نہیں بولتا اور اپنی اسٹوری پر قائم ہے۔امریکی صدر ٹرمپ کا کہنا ہے کہ سی این این ان کے خلاف کافی عرصے سے نفرت اور تعصب پر مبنی خبریں دے رہا ہے ، سی این این کے صدر جیف زکر کی کارکردگی انتہائی خراب ہے ، ریٹنگ بھی بری ہے ، اے ٹی اینڈ ٹی کو اپنی ساکھ بچانے کے لیے جیف کو فوری طور پر نوکری سے فارغ کر دینا چاہیے۔دوسری جانب سی این این کے بیان میں کہا گیا کہ جناب صدر غلطی نہ کریں ، سی این این جھوٹ نہیں بولتا ، بلکہ خبریں رپورٹ کرتا ہے ، جب برسراقتدار لوگ جھوٹ بولتے ہیں تب سی این این لوگوں کو اس سے آگاہ کرتا ہے ۔صدر ٹرمپ نے این بی سی چینل کے چیئرمین اینڈی لیک کو عہدے سے ہٹانے کی ممکنہ خبر پر بھی مسرت کا اظہار کیا.صدر ٹرمپ نے واشنگٹن میں ایک تقریب کے دوران نومبر میں ہونے والے وسط مدتی انتخابات سے متعلق کہا کہ اگر ڈیموکریٹس جیت گئے تو وہ تمام کام منسوخ کریں گے جو موجودہ حکومت نے کیے ہیں ۔ٹرمپ نے امید ظاہر کی کہ انتخابات میں تشدد کے واقعات نہیں ہوں گے ۔

ضرور پڑھیئے:

ٹرمپ انتظامیہ عمران خان کو بھارت سے تعلقات بہتر بنانے کا موقع دینا چاہتی ہے،افسرامریکی محکمہ دفاع
واشنگٹن: امریکی محکمہ دفاع کے افسر رینڈل شرائیو نے کہا کہ پاکستان کی بہت سی حکومتیں بھارت کے ساتھ تعلقات بہتر بنانا چاہتی تھیں لیکن جلد ہی ان حکومتوں کو حقائق اور مشکلات کا اندازہ ہو گیا۔امریکی محکمہ دفاع پینٹاگون کے ایک افسر نے کہا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ پاکستان کے نئے وزیراعظم عمران خان کو موقع دینا چاہتی ہے تاکہ وہ بھارت کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کی کوشش کر سکیں۔امریکا کے اسسٹنٹ سیکرٹری دفاع برائے امور ایشیا و بحرالکاہل رینڈل شرائیور نے کہا کہ پاکستان کی بہت سی حکومتیں بھارت کے ساتھ تعلقات بہتر بنانا چاہتی تھیں لیکن جلد ہی ان حکومتوں کو حقائق اور مشکلات کا اندازہ ہو گیا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان سے متعلق امریکا کی پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں آئے گی۔افسر نے مزید کہا کہ کہا کہ پاکستان کی مالی امداد میں کٹوتی کا امریکی رویہ برقرار رہے گا۔امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو آئندہ ہفتے پاکستان کا دورہ کریں گے۔خیال رہے کہ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو اور چیئرمین جوائنٹس چیف آف اسٹاف جنرل جوزف ڈنفورڈ آئندہ ہفتے پا کستان کا دورہ کریں گے اور پاکستان کی نئی قیادت سے ملاقات کریں گے۔امریکی وزیر دفاع جیمز میٹس نے تصدیق کی ہے کہ وزیر خارجہ مائیک پومپیو اور چیئرمین جوائنٹ چیف آف اسٹاف جنرل جوزف ڈن فورڈ آئندہ ہفتے پاکستان آئیں گے۔امریکی وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ امریکی وزیر خارجہ اور جنرل جوزف وزیر اعظم عمران خان اور دیگر پاکستانی رہنماں سے ملاقات میں امریکی عہدیدار صاف اور واضح طور پر یہ طے کریں گے کہ ہمیں کیا کرنا ہے۔