Buy website traffic cheap

پاکستان

پاکستان عالمی ایٹمی توانائی ایجنسی کے بورڈ آف گورنرز کا رکن منتخب

ترجمان پاکستان ایٹمی توانائی کمیشن کے مطابق پاکستان کا انتخاب سفارتی سطح پر ایک بڑی کامیابی اور جوہری ٹیکنالوجی کے پُرامن استعمال کے شعبے میں پاکستان کے نمایاں کردار کا بین الاقوامی سطح پر اعتراف ہے۔
واضح رہے کہ آئی اے ای اے کے 35 رکن ممالک میں سے 11 ارکان کو 2 سال کے عرصے کے لیے منتخب کیا جاتا ہے۔
انٹرنیشنل اٹامک انرجی ایجنسی ایک عالمی تنظیم ہے جو جوہری توانائی کے پرامن استعمال اور ایٹمی ہتھیاروں کی تیاری سمیت فوجی مقاصد کے لیے اس کے استعمال کو روکنے کی غرض سے قائم کیا گیا ہے۔

………………………
یہ خبر بھی پڑھیئے

نویں محرم ،ملک بھر میں عزاداری جلوس،افغانستان اور ایران کے ساتھ سرحدیں بند،مہاجرین کے پشاور داخلے پر پابندی
راولپنڈی اسلام آباد سمیت ملک کے کئی شہروں کو موبائل سروس معطل،سندھ اور پنجاب کے بڑے شہروں میں موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر بھی پابندی،دفعہ144کا نفاذ رہا،یوم عاشور آج ہو گا،ملک بھر سخت سیکورٹی،جلوسوں کے راستوں میں بلند عمارات پر شارپ اسنائپرز تعینات رہے،جلوس کے راستوں پر دکانیں ،پٹرول پمپ اور سینما گھر سیل ،اہم شہروں میں موبائل سروس بند رہنے کا امکان

نواسہ رسول حضرت امام حسین کو نذرانہ عقیدت پیش کرنے کیلئے ملک بھر میں 9 محرم الحرام کے جلوس برآمد اور مجالس عزا کا انعقادکیا گیا جبکہ اس موقع پر سکیورٹی خدشات کے پیش نظر افغانستان اور ایران کے ساتھ سرحدیں بند،مہاجدین کے پشاور داخلے پر پابندی،راولپنڈی اسلام آباد سمیت ملک کے کئی شہروں کو موبائل سروس معطل،سندھ اور پنجاب کے بڑے شہروں میں ڈبل سواری پر بھی پابندی،دفعہ144کا نفاذ رہا،یوم عاشور آج ہو گا،ملک بھر سخت سیکورٹی،اہم شہروں میں موبائل سروس بند رہنے کا امکان۔جمعرات کو اسلام آباد میں 9 محرم الحرام کا مرکزی جلوس سیکٹر جی سکس میں امام بارگاہ اثنا عشری سے نماز ظہر کے بعد برآمد ا ہوا جومقررہ راستوں سے ہوتا ہوا جی نائن کراچی کمپنی میں اختتام پزیر ہوا جہاں مرکزی مجلس اعزا کا اہتمام کیا گیا تھا۔ اس موقع پر جلوس کے راستے میں پانی اور دودھ کی سبیلیں لگائی گئیں اور کھانوں کا اہتمام کیا گیا تھا۔جلوس میں ہزاروں مر د اور خواتین عزاداروں نے شرکت کی ۔ جو سینہ کوبی،نوحہ خوانی اور زنجیر زنی کرتے رہے ۔اس موقع پر ضلعی انتظامیہ کے حکم پر شہر میں موبائل سروس صبح 9بجے سے رات 9بجے تک بند رہی ۔شہر میں کوئی ناخوشگوار واقعہ رونما نہیں ہوا۔کراچی میں نو محرم الحرام کو نشترپاک میں مجلس عزا کے بعد علم ذاولجناح کا مرکزی جلوس برآمد ہوا، جلوس اپنے روایتی راستوں میں گامزن ہے، جلوس کی سیکیوریٹی پر پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری تعینات ہے،جبکہ شہر میں موبائل فون سروس جزوی طور پر معطل رہی۔جلوس کے شرکا نے نماز ظہرین امام بارگاہ علی رضا کے سامنے ادا کی ،جس کے بعد جلوس سی بریز، ایمپریس مارکیٹ، ریگل چوک، ریڈیو پاکستان سے ہوتا ہوا، امام بارگاہ حسینیان ایرانیان کھارادر پر اختتام پذیر ہوا۔جلوس کی سیکیورٹی کے لیے ایم اے جناح روڈ کے اطراف کی تمام گلیوں کو کنٹینرز لگا کر بند کردیا گیا تھا، جلوس کی سیکیوریٹی کے لیے پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری تعینات کی گئی ہے، جبکہ بلند عمارتوں پر ماہر نشانہ باز بھی موجود رہے ۔جلوس کے راستے میں مختلف مقامات پر سبیل حسین بھی لگائی گئی ہیں جن پر جلوس کے شرکا شربت پیتے رہے ، اس کے علاوہ جلوس کے راستے میں آنے والی تمام دکانوں کو سیکیوریٹی کلیئرینس کے بعد سیل کیا گیا تھا۔سیکیورٹی کو مزید موثر بنانے کے لیے شہرمیں پر موبائل فون سروس جزوی طور پر معطل رہی جبکہ موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پربھی 10 محرم تک پابندی عائد ہے۔جلوس کے راستوں کی فضائی نگرانی بھی کی جا تی رہی، جلوس کی گزر گاہوں پر موجود پٹرول پمپس اور سینما گھروں کو بھی 10 محرم الحرام تک سیل کیا گیا ہے۔جلوس کی نگرانی کیلئے سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے گئے ہیں جبکہ 18 ہزار سکیورٹی اہلکار حفاظتی فرائض سر انجام دیتے رہے ۔ملتان میں نو محرم الحرام کو علم اور ذوالجناح کامرکزی ماتمی امام بارگاہ ممتاز آباد سے بر آمدہوا ، جلوس کی سیکورٹی کے لئے سخت انتظامات کیئے گئے تھے ۔جلوس میں میں عزاداروں کی بڑی تعداد موجود تھی ، عزاداروں کی جانب سے شہدائے کربلا کی یاد میں نوحہ خوانی، ماتم زنی اور زنجیر زنی بھی کی گئی ۔اس موقع پر ذاکرین کی جانب سے شہدائے کربلا کی لازوال قربانیوں پر بھی روشنی ڈالی گئی ۔جگہ جگہ عزاداروں کے لئے سبیلیں بھی لگائی گئی تھیں جبکہ نزرونیاز کا سلسلہ بھی جاری ہے، جلوس مرکزی روایتی راستوں ممتازہ آباد بازار، بی سی جی چوک، قدیمی گرانڈ سے ہوتا ہوا واپس امام باگارہ ممتازہ آباد میں پہنچ کر اختتام پذیرہوا۔جلوس کی سیکیورٹی کے لئے سخت انتطامات کیے گئے تھے ۔ ایلیٹ فورس، پولیس کے ساتھ ساتھ رضا کاروں کی بھی بڑی تعداد جلوس کی سیکیورٹی پر تعینات رہی جبکہ سی سی ٹی وی کیمروں سے بھی جلوس کی مانیٹرنگ کا سلسلہ جاری رہا۔ملتان پولیس نے ضلع بھر میں 172 مجالس میں سے 39 مجالس اور 75 جلوسوں میں سے 13 کو انتہائی حساس قرار دیا تھا۔ ملتان میں جلوسوں کی سیکیورٹی کے لیے 2300 سے زائد پولیس اہلکار و افسران ڈیوٹی پر مامور ہیں۔ ترجمان سول ڈیفنس کے مطابق ملتان میں پاک گیٹ، حرم گیٹ، خونی برج، شاہ رسال اور دیگر جلوسوں کیروٹس کی نگرانی کی جائے گی، یوم عاشور تک 130 کیمروں کی مدد سے جلوسوں اور مجالس کی نگرانی کی جائے گی جب کہ مانیٹرنگ سیل میں عملہ یوم عاشور تک 24 گھنٹے نگرانی میں مصروف رہیگا۔پشاور میں نویں محرم کے سلسلے میں دو مرکزی جلوس برآمد ہوئے، امام بارگاہ حسینیہ ہال صدرسے صبح دس 10جلوس ذوالجناح برآمد ہوا اور دوسراجلوس ذوالجناح امام بارگاہ بی بی صاحبہ تحصیل سیسہ پہر3بجے برآمدہوا۔ جلوس کے اطراف اور گرد ونواح میں موبائل سروس بند رہی ۔ شہرکی دیگرچھوٹی بڑی امام بارگاہوں سے 16جلوس برآمد ہوئے جن کی سکیورٹی کیلئے 2ہزار پولیس اہلکار جبکہ ضلع بھرمیں 9ہزار سے زائد پولیس اہلکار تعینات رہے ،اس موقع پر شہر میں موبائل سروس معطل رہی ۔افغان مہا جرین کے شہر میں داخلے پر پابندی عائد کی گئی تھی جو آج یوم عاشور پر بھی بر قرار رہے گی۔ضلعی انتظامیہ پشاورکیمطابق آج نویں محرم الحرم کے موقع پردفعہ 144 پر سختی سے عمل کی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔شہر میں موٹرسائیکل کی ڈبل سوری، بغیر نمبر اور بوگس نمبر پلیٹ کی حامل گاڑیوں کے استعمال آتش گیرمواد کی خرید و فروخت اورامام بارگاہوں کے قریب مکانات کی چھتوں پر کھڑے ہونے پرپابندی پرسختی سے عمل درآمد کی ہدایات جاری کی گئی ہیں۔اس کے علاوہ افغان مہاجرین کے اندرون شہر اور کینٹ ایریا میں داخلے پر آج بھی پابندی رہے گی۔نویں محرم کو بلوچستان میں افغانستان اور ایران سے ملحقہ سرحدوں کو بند رکھا گیا جو آج دسویں محرم کو بھی بند رہیں گی۔کوئٹہ سمیت9 اور 10 محرم الحرام کے موقع پر صوبے بھر میں سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے ، کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے بچنے کے لیے بلوچستان کے علاقے چمن میں پاک افغان سرحد پر باب دوستی جب کہ تفتان میں پاک ایران سرحد پر زیرو پوائنٹ اور راہداری گیٹ دو روز کے لیے بند کردیا گیا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ افغانستان اور ایران سے ہر قسم کی زمینی آمد ورفت ہفتے کے روز سے دوبارہ معمول پر آجائے گی۔ 9 محرم الحرام کے موقع پر لاہور، اسلام آباد، کوئٹہ ، پشاور،کراچی، حیدر آباد، سانگھڑ، لاڑکانہ، جیکب آباد، شکارپور، فیصل آباد اور ملتان سمیت کئی شہروں میں موبائل فون سروس کہیں جزوی اور کہیں مکمل طور پر معطل رہی ۔ سمیت درجنوں شہروں میں موبائل فون سروس بند رہی ۔ متعلقہ حکام کا کہنا ہے کہ کئی شہروں میں مکمل جب کہ کچھ شہروں میں موبائل فون سروس جزوی معطل کی گئی ہے جو کہ ماتمی جلوسوں کے ختم ہونے کے بعد بحال کردی جائے گی۔ یوم عاشور کو بھی اسی لائحہ عمل کے تحت موبائل فون سروس معطل رہے گی۔دیگر شہروں کی طرح آج لاہور میں نویں محرم کے متعدد جلوس برآمد کئے جائیں گے، امام بارگاہ عطیہ اہل بیت نکلسن روڈ سے شبیہ ذوالجناح برآمد ہو ا، روٹ کے اطراف میں خار دار تاریں اورواک تھرو گیٹ نصب کر دیئے گئے ہیں۔ نویں محرم کا مرکزی جلوس پانڈو اسٹریٹ اسلام پورہ سے برآمد ا جو نوری بلڈنگ، سیکرٹریٹ، پرانی انارکلی، جین مندر سے ہوتا ہوا واپس پانڈو سٹریٹ جائے گا، شہر میں ہونے والی مجالس اور جلوسوں کے گرد سیکیورٹی کے سخت انتطامات کئے گئے ہیں، جلوس کے روٹ پر موبائل فون سروس جزوی طور پر معطل رہی ۔ڈیرہ اسمعیل خان میں 9 محرم کا مرکزی جلوس امام بارگاہ تھلہ بموں شاہ سے برآمد ہوا، عزاداران امام حسین و دیگر شہدائے کربلا کی یاد میں ماتم کرتے ہوئے مسجد امام علی شاہ کے باہر جا کر اختتام پزیر ہوا۔سیکیورٹی فورسز کی جانب سے تمام شہروں میں جلوسوں کے راستوں پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں اور اہلکاروں کی بھاری نفری تعینات کی گئی تھی۔ فاٹا میں پارہ چنار سمیت مختلف علاقوں سے ماتمی جلوس برآمد ہوئے تاہم کسی نا خوشگوار واقعہ کی اطلاع نہیں ملی۔گوجرانوالہ میں مجموعی طور پر 103 جلوس نکالے جائیں گے جب کہ مرکزی جلوس امام بارگاہ حویلی سادات سے برآمد ہوا۔ملک کے دیگر چھوٹے بڑے شہروں میں عزاداری جلوس برآمد کئے