Buy website traffic cheap

مڈٹرم الیکشن

کتنے اُمیدوار سیاسی کھاڑے میں اُترے ہیں .. فہرست جاری

الیکشن کمیشن نے قومی اور صوبائی اسمبلیوں پر انتخابات لڑنے والے امیدواروں کی فہرست جاری کر دی، جنرل اور مخصوص 1070 نشتوں پر 12 ہزار 570 امیدوار میدان میں ہیں۔ الیکشن کمیشن کے اعدادوشمار کے مطابق، قومی اسمبلی کی 272 جنرل نشتوں پر 3459 اور 60 مخصوص نشتوں پر 216 امیدوار میدان میں ہیں، پنجاب اسمبلی کی 297 جنرل نشتوں کے لیے 4036 جبکہ 74 مخصوص نشتوں پر 206 میں دنگل پڑے گا۔ سندھ اسمبلی کی 129 جنرل نشتوں پر 824 جبکہ مخصوص 38 نشتوں پر 130 امیدواروں میں ٹاکرا ہو گا۔ خیبر پختونخوا میں 99 جنرل نشتوں پر 1165 اور 25 مخصوص نشتوں کے لیے 99 امیدواروں میں مقابلہ ہو گا۔ بلوچستان میں 51 جنرل نشتوں پر 943 مخصوص 14 نشتوں پر 64 امیدواروں میں مقابلہ ہو گا،

————————–
یہ خبر بھی پڑھیئے

لیاقت بلوچ سمیت متحدہ مجلس عمل کے تمام امیدوار اسلامی تحریک کے ہیں،حمایت کا اعلان بے معنی ہے، علامہ سبطین سبزواری
لاہور …. اسلامی تحریک پنجاب کے صدر علامہ سید سبطین حیدر سبزواری نے واضح کیا ہے کہ لیاقت بلوچ سمیت متحدہ مجلس عمل کے تمام امیدوار ان کے اپنے ہیں۔ ان کی حمایت کے اعلان کی میڈیا رپورٹس پر افسوس ہوا۔اسلامی تحریک ایم ایم اے کا لازمی حصہ ہے، ہمیں کسی کی حمایت کے اعلان کی ضرورت نہیں۔ حمایت کے اعلان کی ضرورت تو اس امیدوار کی پڑتی ہے۔ جب امیدوار کسی دوسری جماعت کا ہو۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ دیانتدار قیادت صرف اور صرف متحدہ مجلس عمل کے پاس ہے۔ نظام مصطفی نافذ کریں گے۔ اسلامی مکاتب فکر کے درمیان انتشار پیدا نہیں ہونے دیں گے۔ متحدہ مجلس عمل دہشت گردی اور فرقہ واریت کی نفی ہے۔ انہوں نے کہا کہ متحدہ مجلس عمل نے قومی اسمبلی کے 192 ، پنجاب میں 192، خیبر پختونخواہ میں 90، بلوچستان میں 45، سندھ میں 110 صوبائی اسمبلی کی نشستوں پر امیدوار کھڑے کئیے ہیں، جبکہ قومی اور صوبائی جنرل نشستوں پر56 خواتین بھی امیدوار ہیں۔ علا مہ سبطین سبزواری کا کہنا تھ اکہ متحدہ مجلس عمل 6 جولائی ملتان، 8 جولائی کوئٹہ، 15 جولائی کراچی میں بڑے انتخابی جلسے منعقد کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ ایم ایم اے کی تمام جماعتیں دہشت گردی اور تکفیریت کو فتنہ قراردیتی ہیں۔کالعدم تنظیم کے سربراہ کو انتخابات میں حصہ لینے کی اجازت ملنا عدلیہ، فوج اور الیکشن کمیشن کے لیے سوالیہ نشان ہے۔
پاکستان پیپلز پارٹی کے سیکریٹری جنرل سید نیر حسین بخاری نے بھکر میں پی ٹی آئی کے کارکنوں کی طرف سے چھ سالہ معصوم بچے پر وحشیانہ تشدد کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ واقعہ عمران نیازی کی طرف سے پی ٹی آئی کے کارکنوں کو دی جانے والی تربیت کا نتیجہ ہے۔ پیپلزپارٹی کے سیکریٹری جنرل نے کہا کہ عمران نیازی نے معاشرے میں عدم برداشت کا رجحان پیدا کیا اور تشدد کی حوصلہ افزائی کی۔ نیر بخاری نے کہا کہ بھکر کے واقعے نے عمران نیازی کے نئے پاکستان کا بھانڈا پھوڑ دیا ہے۔ پیپلزپارٹی کے سیکریٹری جنرل نے انسانی حقوق کی تنظیمیں اور بچوں کے تحفظ کے ادارے اس واقعے کا نوٹس لیں اور آواز بلند کریں۔
نگران وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹر حسن عسکری سے آج نگران صوبائی وزیر بلدیات ، توانائی اور پراونشل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی ظفر محمود نے ملاقات کی ۔وزیراعلیٰ آفس میں منعقد ہ ملاقات کے دوران عام انتخابات کی تیاریوں، انتخابی ضابطہ اخلاق پر عملدرآمد اور مون سون و ممکنہ سیلاب سے نمٹنے کیلئے کئے جانیوالے اقدامات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔نگران وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹر حسن عسکری نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نگران حکومت الیکشن کمیشن کے جاری کردہ ضابطہ اخلاق کی پاسداری کو یقینی بنارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر قانون کے تحت کارروائی کی جائے اور پولنگ سٹیشنز پر سہولتوں کی فراہمی کو یقینی بنانے کیلئے ہر ضروری اقدام اٹھایا جائے۔نگران وزیراعلیٰ نے کہا کہ شفاف اور منصفانہ انتخابات کا انعقاد نگران حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ عام انتخابات کے شفاف اور غیر جانبدارانہ انعقاد کو یقینی بنانے کیلئے پرعزم ہیں اور اس اہم قومی مقصد کے حصول کیلئے ہر سطح پر فول پروف انتظامات کئے جا رہے ہیں۔ 25 جولائی کو پولنگ کیلئے پرامن ماحول کو یقینی بنایا جائے گا تاکہ ووٹرز بلاخوف و خطر اپنا حق رائے دہی استعمال کرسکیں۔ انہوں نے کہا کہ ووٹرز کو آزادانہ طور پر اپنا حق رائے دہی استعمال کرنے کیلئے ہرممکن اقدامات کئے جائیں گے۔ حساس پولنگ سٹیشنز کی نگرانی کیلئے ویڈیو کیمرے استعمال کئے جائیں گے۔ انتخابات کے پرامن اور شفاف انعقاد کیلئے انفارمیشن ٹیکنالوجی سے مدد لی جائے گی اور الیکشن کمیشن کے وضع کردہ ضابطہ اخلاق کی ہر صورت پابندی کرائی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ حالیہ بارشوں کے باعث دریاؤں میں پانی کی صورتحال کو 24 گھنٹے مانیٹر کیا جائے اورکسی بھی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تمام انتظامات مکمل رکھے جائیں۔ ڈپٹی کمشنر اشفاق احمد چوہدری نے کہا ہے کہ عوام کو علاج معالجہ کی سہولتوں کی فراہمی حکومت پنجاب کی اولین ترجیح ہے سرکاری ہسپتالوں میں ڈاکٹرز اور کنسلٹنس ودیگر عملہ اپنی حاضریاں یقینی بنائیں مریضوں کے علاج معالجہ میں کسی قسم کی کوتاہی اور غفلت برداشت نہیں کی جائے گی یہ بات انہوں نے ٹی ایچ کیو ہسپتال میاں چنوں کے اچانک معائینہ کے دوران کہی ڈپٹی کمشنر نے ہسپتال کے مختلف شعبہ جات کا معائینہ کیا مریضوں کو ادویات کی فراہمی کا ریکارڈ بھی چیک کیا اس موقع پر انہوں نے ایم ایس کو صفائی کی صورت حال کو مزید بہتر بنانے کہ احکامات دئیے ۔