Buy website traffic cheap

Fazlur Rehman will take a unanimous decision on the election

ملک کو نئی پریکٹس کی بھینٹ نہیں چڑھا سکتے،الیکشن پر متفقہ فیصلہ کرینگے، فضل الرحمان

لاہور: سربراہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ ہم الیکشن کروانے والے لوگ ہیں، الیکشن پر ہم ایک متفقہ فیصلہ کریں گے، ملک کو نئی پریکٹس کی بھینٹ نہیں چڑھا سکتے۔لاہور میں وفاقی وزیر اور مسلم لیگ نے کے مرکزی رہنما سردار ایاز صادق سے انکے بھائی کے انتقال پر تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ ملکی صورتحال کو نئی پریکٹس کی بھینٹ نہیں چڑھا سکتے، جو ملک کیلئے مفید ہوگا وہی فیصلہ کریں گے۔انہوں نے کہا ہے کہ 2018 کے الیکشن نتائج کو کسی صورت قبول نہیں کرتے،2017 کے بعد ملکی معیشت کی گروتھ گری ہے عوام سمجھ رہی ہے ملک کو اس دلدل میں کس نے دھکیلا ہے۔فضل الرحمان نے کہا کہ جلسے ہم نے بھی کیے ہیں، ہمارے جلسوں کے مقابلے میں پی ٹی آئی کے جلسے نہیں جلسیاں تھیں، لیکن ہمارے جلسوں میں قانون کی کوئی خلاف ورزی نہیں ہوئی، اب ایک جماعت نے فوجی املاک کو نقصان پہنچایا ہے تو آرمی ایکٹ تو حرکت میں آئے گا، آرمی ایکٹ کی بھی قانون میں ایک حیثیت ہے، ا?رمی ایکٹ پر بھی اپیل ہو سکتی ہے۔سربراہ پی ڈی ایم نے مزید کہا پی ڈی ایم انتخابی اتحاد نہیں ہے، ہر پارٹی کا اپنا منشور ہے، سیٹ ایڈجسٹمنٹ کے طور پر علاقائی اتحاد کر سکتے ہیں، پی ٹی آئی سے مذاکرات کے حوالے سے جو میں کہہ رہا ہوں وہی پی ڈی ایم کا مو¿قف ہے، پی ٹی آئی پر پابندی کا فیصلہ عدالتوں نے کرنا ہے۔