Buy website traffic cheap

Another concern for the public is the preparations to increase gas prices after electricity

عوام کیلئے ایک اور پریشانی، بجلی کے بعد گیس کی قیمتوں میں بھی اضافے کی تیاریاں

اسلام آباد: عوام کیلئے ایک اور پریشانی، بجلی مہنگی کرنے کے بعد گیس کی قیمتوں میں بھی اضافے کی تیاریاں شروع کر دی گئیں۔ذرائع وزارت توانائی کے مطابق آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) کو بتا دیا ہے کہ گیس کی قیمتوں پر ورکنگ جاری ہے۔ذرائع وزارت توانائی کا کہنا ہے کہ گیس کی قیمتوں میں اضافہ ہر صورت ہو گا کیونکہ اس حوالے سے عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) کو لکھ کر دیا ہوا ہے، جائزہ لیا جا رہا ہے کہ کس سلیب کے صارفین کے لیے گیس مہنگی کی جائے۔ذرائع کے مطابق ماہانہ 300 مکعب میٹر اور اس سے اوپر والے گھریلو صارفین کے لیے گیس پہلے ہی بہت مہنگی ہے، کوشش کی جا رہی ہے کہ آخری تین مہنگے ترین گیس سلیب کو نہ چھیڑیں۔ذرائع وزارت توانائی کے مطابق اس وقت ماہانہ 300 مکعب میٹر تک گیس کے استعمال پر فی ایم ایم بی ٹی یو قیمت 1100روپے ہے، ماہانہ 400 مکعب میٹر استعمال تک فی ایم ایم بی ٹی یو قیمت 2000 روپے ہے، ماہانہ 400 مکعب میٹر سے زائد استعمال پر فی ایم ایم بی ٹی یو قیمت 3100 روپے ہے، باقی تمام سلیبز اور سیکٹرز کے لیے گیس کی قیمت کی ایڈجسٹمنٹ ہو گی، کوشش کی جارہی ہے کہ باقی گھریلو صارفین پر کم سے کم بوجھ پڑے۔ذرائع وزارت توانائی کا کہنا ہے کہ گیس کی قیمتوں میں اضافے کے لیے اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) کو تفصیلات آئندہ ہفتے پیش کیے جانے کا امکان ہے۔