Buy website traffic cheap


بیروت بندرگاہ پر پھر سے خوفناک آگ بھڑک اٹھی

بیروت(مانیٹرنگ ڈیسک)لبنان میں بیروت بندرگاہ گاہ پر کیمیکل کے ذخیرے میں دھماکے کے مقام کے قریب ایک بار پھر خوفناک آگ بھڑک اٹھی جس پر قابو پانے کے لیے فوج اور فائر بریگیڈ کی گاڑیوں کو طلب کرلیا گیا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق ایک ماہ قبل بیروت بندرگاہ پر رکھے کیمیکل کے ذخیرے میں خوفناک دھماکے میں آدھا شہر تباہ ہوگیا تھا اور 200 سے زائد افراد ہلاک ہوگئے تھے اور تاحال ملبہ ہٹانے کا کام جاری ہے جس کے دوران ایک مرتبہ پھر خوفناک آگ بھڑک اٹھی۔

رواں ہفتے میں یہ دوسری بار اچانک بھڑکی ہے تاہم اس بار شدت کئی گنا زیادہ ہے، آگ کے شعلے آسمان سے باتیں کرنے لگے اور پورا علاقہ دھوئیں کے کالے بادلوں میں چھپ گیا۔ امدادی کام کے لیے فوج کو طلب کرلیا گیا۔

فوج کی مدد سے فائر بریگیڈ کی درجن گاڑیاں آگ پر قابو پانے کی کوششوں میں مصروف ہیں، کسی کو بھی بندرگاہ کے متاثرہ حصے میں جانے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے۔ تاحال کسی ہلاکت یا زخمی ہونے کی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔فوج کے ترجمان کا کہنا ہے کہ آگ بندرگاہ کے ویئر ہاﺅس میں لگی جہاں بڑی مقدار میں آئل اور ٹائرز کا ذخیرہ موجود ہے، کم سے کم نقصان کے لیے امدادی کاموں کو دن رات شفٹوں میں جاری رکھا گیا ہے۔