Buy website traffic cheap

Beware! Don't you clean your ears with cotton buds or a key? Know the big loss

خبردار! کہیں آپ بھی کانوں کو کاٹن بڈز یا چابی سے صاف تو نہیں کرتے؟ بڑا نقصان جان لیں

ہر گھر میں کاٹن بڈز لازمی موجود ہوتے ہیں کیونکہ انہیں کان کی صفائی کے لیے استعمال کیا جاتا ہے جب کہ کئی مرد حضرات کو آپ نے کانوں میں چابی ڈال کر خارش کرتے یا انہیں صاف کرتے بھی دیکھا ہوگا لیکن کیا آپ کو اس بات کا علم ہے کہ اس سے کانوں کے پردہ پھٹ سکتا ہے اور آپ قوتِ سماعت سے محروم ہوسکتے ہیں؟
جی ہاں! کاٹن بڈز جنہیں ہم کان کی صفائی کے لیے استعمال کرتے ہیں وہ آپ کے کانوں کو شدید نقصان پہنچاسکتے ہیں۔
گردن اور دماغ کی سرجری (اوٹولرنگولوجی ) کے جریدے میں شائع ہونے والی ایک تحقیق کے مطابق کان میں آپ کے ہاتھ کی انگلی سے چھوٹی چیز نہیں جانی چاہیے اور عموماً ہم کاٹن بڈز ڈال لیتے ہیں۔
کاٹن بڈز آپ کے کانوں کیلئے نقصان دہ کیوں ہیں؟
بہت سی وجوہات ہیں جن کے باعث آپ کو کانوں میں کاٹن بڈز، چابی یا بالوں میں لگانے والی پن نہیں ڈالنی چاہیے، آئیے ان میں سے کچھ پر نظر ڈالتے ہیں۔
* دراصل جسے ہم کان کا میل سمجھ رہے ہوتے ہیں وہ جسم سے نکلنے والا قدرتی مادہ ہوتا ہے جو حقیقت میں کان کی نازک سطح کی حفاظت کرتا ہے جیسے کہ ائیر ڈرم۔
کان میں جانے والی مٹی ‘ائیر ویکس’ بن جاتی ہے جو کان کو کسی قسم کا نقصان پہنچنے نہیں دیتی، کچھ کھانے یا بولنے کے دوران یہ ویکس سوکھ کر خود ہی کانوں سے خارج ہوجاتی ہے، ائیر ویکس قدرتی طریقہ ہے جس سے آپ کے کان صاف رہتے ہیں۔
* اس سے آپ کے کان میں کوئی انجری ہوسکتی ہے یا آپ قوت سماعت سے محروم بھی ہوسکتے ہیں کیونکہ کاٹن بڈز یا ہاتھ کی انگلی سے چھوٹی چیز کانوں میں ڈالنے سے ائیر ڈرم متاثر ہوسکتا ہے۔
*کاٹن بڈز سے کان صاف کرنے کے بجائے ائیر ویکس کان کے مزید اندر جاسکتا ہے جس کے نتیجے میں انفیکشن اور دیگر بیماریاں ہوسکتی ہیں۔
* اس کے استعمال سے یہ خطرہ بھی ہوتا ہے کہ کاٹن بڈ کی روئی ا?پ کے کان کے اندر نہ پھنس جائے، اسے نکالنا انتہائی مشکل ہوتا ہے۔
کاٹن بڈز کے بجائے گھر میں کن طریقوں سے کان صاف کرنے چاہئیں؟
آپ نہاتے وقت کانوں کو گرم پانی سے اچھی طرح دھو لیں، ساتھ ہی ہاتھ کی چھوٹی انگلی کی مدد سے صاف کرسکتے ہیں۔اس کے علاوہ سوتے وقت چولہے پر زیتون کا تیل گرم کریں، اور ڈراپر کی مدد سے چند قطرے کان میں ڈالیں اور سوجائیں، زیتون کا تیل خود بخود کان میں جذب ہوجائے گا اور کان صاف رہے گا۔