Buy website traffic cheap


باکسر عامر خان حکومت پاکستان سے مایوس ہوگئے

لاہور(سپورٹس ڈیسک)پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان حکومتِ پاکستان سے مایوس ہوگئے۔

کورونا وائرس کی روک تھام اور اس سے بچاؤ کے لیے جہاں شوبز انڈسٹری کی شخصیات لوگوں کی مدد کرر ہی ہیں تو وہیں قومی کرکٹرز اور دیگر معروف شخصیات بھی اس کارِ خیر میں اپنا حصہ ڈال رہے ہیں۔اسی ضمن میں پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان بھی عوام کی مدد کرنے کے لیے ہر ممکن کوشش کرتے دکھائی دے رہے ہیں۔گزشتہ دنوں باکسر عامر خان نے پاکستان کو کورونا وائرس کے خلاف جنگ لڑنے کے لیے 4 کروڑ روپے دینے کا اعلان کیا تھا۔اس سے قبل بھی عامر خان نے اپنی اسلام آباد باکسنگ اکیڈمی حکومت پاکستان کو دینے کا اعلان بھی کیا تھا اور ان کا کہنا تھا کہ لوگوں کی زندگیاں بچانے کے لیے وہ اپنا کردار ادا کرنا چاہتے ہیں۔

اب حال ہی میں باکسر کی جانب سے ایک ٹوئٹ کی گئی جس میں انہوں نے حکومت سے مایوسی کا اظہار کیا۔اپنے ٹوئٹ میں عامر خان کا کہنا تھا کہ ‘بہت مایوسی ہوئی، میں اسلام آباد میں عامر خان باکسنگ اکیڈمی میں 10 ہزار ضرورت مند اور غریب خاندانوں کو راشن فراہم کرنے کے لیے ان کی مدد کررہا ہوں’۔ان کا کہنا تھا کہ ‘پاکستان اسپورٹس بورڈ کے حکام نے میرے اس کام میں رکاوٹیں پیدا کردی ہیں اور وہاں لوگوں اور کھانے کی اشیاء لے جانے سے روکا جا رہا ہے’۔

ساتھ ہی عامر خان نے اپنی ٹوئٹ وزیراعظم عمران خان، زلفی بخاری اور ڈاکٹر ظفر مرزا کو بھی ٹیگ کی۔