Buy website traffic cheap

کراچی:سندھ میں پرائیوٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز میں ناقص منصوبہ بندی کے باعث بی ڈی ایس کی 740 میں سے 631 نشستیں خالی ہیں۔ ناقص پالیسیوں نے طلبا کا مستقبل تباہی کے دہانے پر پہنچا دیا، ناقص منصوبہ بندی کے باعث بی ڈی ایس کی740میں سے631 نشستیں خالی ہیں

کیونکہ ایم ڈی کیٹ نتائج کے نمبر 60 فیصد لانے کی شق کے باعث طلبا داخلوں سے محروم رہ گئے۔ صدرپرائیوٹ میڈیکل اینڈ ڈینٹل کالجز ایسوسی ایشن سندھ ڈاکٹر رضی کا کہنا ہے کہ داخلے کی صورتحال سے وزیر اعظم عمران خان کو آگاہ کیا ہے

سندھ بھر کے 12 میڈیکل ڈینٹل کالجز میں صرف 109 داخلے ہوئے ہیں۔ ڈاکٹر رضی نے کہا کہ 631 نشستیں ابھی خالی ہیں لہذا داخلوں کی تاریخ میں تین ہفتے کا اضافہ کیا جائے اور ایم ڈی کیٹ نتائج کی غیر آئینی شق کو ختم کرکے چالیس فیصد کیا جائے۔