Buy website traffic cheap


موبائل فون سے دوری ہمیں بے چین کیوں کردیتی ہے؟

لزبن، پرتگال(مانیٹرنگ ڈیسک) ہم میں سے بہت سے لوگ ایسے ہیں جو اپنے فون سے دور ہونے پر پریشانی اور اضطراب کے شکار ہوتے ہیں۔ لیکن اگر اسمارٹ فون سے چند لمحوں کی جدائی بھی تکلیف دہ بن جائے تو یہ ایک نفسیاتی عارضے کی وجہ ہوسکتی ہے جسے ’نوموفوبیا‘ کہتے ہیں۔

سائنسدانوں کےمطابق نوموفوبیا شخصیت کی حساسیت اور کسی فعل کے ذہن پر حاوی ہونے کی کیفیت کو ظاہر کرتا ہے۔ اس طرح فون اگر زندگی کے معاملات میں حارج ہونے لگ جائے تو یہ پریشان کن کیفیت ہوگی۔ اسی وجہ سے ماہرین فون کے ناغے اور دن میں کئی گھنٹوں تک دور رہنے کا مشورہ دیتے ہیں۔

اسی طرح لوگ گھر پر اسمارٹ فون بھول جانے کی صورت میں دوبارہ گھرجاکر لے آتے ہیں جواکثر افراد کا مسئلہ بن چکی ہے۔ 2019 کے سروے کے مطابق صرف امریکا میں 44 فیصد افراد اس کے شکار تھے۔