Buy website traffic cheap


کورونا سے بچائو کیلئے لوگوں نے حفاظتی لباس پہننا شروع کردیا

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)چین کے شہر ووہان سے پھیلنے والا کورونا وائرس تیزی سے دنیا کو اپنی لپیٹ میں لے رہا ہے جس سے ہر انسان خوفزدہ ہے اور احتیاطی تدابیر اختیار کررہاہے۔

عالمی ادارہ صحت کی جانب سے وائرس سے بچاؤ کے لیے مصافحہ کرنے اور ایک دوسرے سے دوری اختیار کرنے کے تجویز دی گئی تھی جس کے بعد دنیا بھر میں لوگ اس وائرس سے بچنے کے لیے کہیں مصافحے کا متبادل تلاش کر رہے ہیں تو کہیں انوکھے اور عجیب و غریب اقدامات بھی کرتے نظر آرہے ہیں۔اس تمام تر صورتحال کے پیش نظر دنیا بھر میں لوگ کورونا سے بچنے کے لیے حفاظتی لباس پہن کر اپنے اپنے گھروں سے نکل رہے ہیں جس کی تصاویر بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں۔

سپر مارکیٹ میں ایک شخص حفاظتی لباس کے طور پر خلاء باز جیسا لباس پہن کر خریداری کرتا دیکھا گیا جس کی تصویر بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی۔برطانیہ میں ایک ہیئر ڈریسر کی تصویریں بھی وائرل ہوئیں جنہوں نے اپنے آپ کو سر سے پاؤں تک حفاظتی لباس سے ڈھانپا ہوا تھا تاکہ وہ وائرس کے پھیلاؤ سے بچ سکیں۔برطانوی ماڈل ناؤمی کیمپبیل نے بھی کورونا کے پھیلاؤ سے بچنے کے لیے جسم کو مکمل طور پر ڈھانپنے والا سوٹ خرید لیا ہے اور باہر نکلنے وقت وہ احتیاط کے طور پر اسے پہن کر نکلتی ہیں۔

چین میں ایک خاتون کو ہسپتال میں زرافہ کے کاسٹیوم (لباس) میں دیکھا گیا جس کی ویڈیو چینی سوشل میڈیا پلیٹ فارم پیئر ویڈیو پر بھی جاری کی گئی تھی۔