ارطغرل اچھا ڈرامہ ہے، یاسر حسین نے وضاحت کردی

کراچی (شوبز ڈیسک) اداکار یاسر حسین نے کہا ہے کہ ارطغرل غازی اچھا ڈرامہ ہے مجھے اس ڈرامے کے مواد پر نہیں بلکہ ڈرامہ کو قومی ٹی وی پر نشر ہونے سے اعتراض ہے ۔

یاسر حسین کا کہنا تھا کہ ارطغرل ڈرامہ بہت اچھا اسکا کنٹنٹ (مواد ) بہت اچھا ہے اسلامی تاریخ کو دکھایا گیا جو ہماری اپنی تاریخ ہے اور میں چاہتا ہوں کہ ایسا مواد عوام کو دکھایا جائے لیکن مجھے صرف اس ڈرامے کو نیشنل ٹی وی پر نشر کرنے پر تحفطات ہیں۔

وزیر اعظم کی ہدایت پر اسلامی تاریخ پر مبنی شہرہ آفاق ترک سیریز دیرلیش ار طغرل کو اردو زبان میں ڈب کر کے ارطغرل غازی کے نام سے رمضان میں سرکاری ٹی پر نشرکیے جانے کا فیصلہ کیا گیا۔انہوں نے کہا کہ قومی ٹی وی چینل کی پروڈکشن ایسی ہونی چاہیے کہ اس کا مواد پوری دنیا میں جائے اور ایشیا میں پاکستان وہ واحد ملک ہے جو سب سے کم پیسوں میں سب سے اچھی پروڈکشن بناتا ہے یہاں تک کہ بھارت میں بھی ہماری پروڈکشن مقبول ہوئی ہیں۔

یاسر حسین کا کہنا تھا کہ اگر ترکی کا نیشنل ٹی ارطغرل جیسا ڈرامہ بناتا ہے تو ہمارے قومی ٹی وی چینل کو اپنے اداکاروں کو استعمال کرتے ہوئے ایسا ڈرامہ بنانا چاہیے اگر پہلے نشر کئے گئے ڈرامے کی 500 قسطیں دو سال تک چلائیں گے تو اس دوران چلنے والی پاکستانی ڈراموں کی 500 قسطیں رک جائیں گےجس سے ہمارے اداکار ٹیکنشین اور دیگر عملے کو کام نہیں ملے گا ۔